پاکستان میں آج کی اسلامی تاریخ | ہجری کیلنڈر کی چاند کی تاریخ 2024

Ayesha Ali

Updated on:

پاکستان میں آج کی اسلامی تاریخ | ہجری کیلنڈر کی چاند کی تاریخ 2024


 

آج کی اسلامی تاریخ، ہجری (اسلامی) کیلنڈر 1446 کے مطابق، ایک بھرپور ثقافتی اور مذہبی ورثے کے ساتھ ہمارے جاری تعلق کی عکاسی کرتی ہے جو صدیوں کی پابندی اور روایت کے ذریعے برقرار ہے۔ ہجری کیلنڈر، جو 7ویں صدی میں قائم ہوا، نبی محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی مکہ سے مدینہ ہجرت (ہجرت) کی نشاندہی کرتا ہے اور یہ نہ صرف مذہبی تقریبات اور تعطیلات کا مشاہدہ کرنے کا ایک ذریعہ ہے بلکہ اس میں گہرے تاریخی اور روحانی سفر کی یاد دہانی کے طور پر بھی کام کرتا ہے۔ اسلام

پاکستان میں آج کی اسلامی تاریخ – ہجری کیلنڈر کی چاند کی تاریخ

12 یکم محرم 1446آج پاکستان کی اسلامی تاریخ
19 جولائی 2024آج کی گریگورین تاریخ

اسلامی تاریخ کیلنڈر 2024

جنوری 2024 رجب 1445 تا شعبان 1445 تاریخ

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
18 شعبان
2
19 شعبان
3
20 شعبان
4
21 شعبان
5
22 شعبان
6
23 شعبان
7
24 شعبان
8
25 شعبان
9
26 شعبان
10
27 شعبان
11
28 شعبان
12
29 شعبان
13
01 رجب
14
02 رجب
15
03 رجب
16
04 رجب
17
05 رجب
18
06 رجب
19
07 رجب
20
08 رجب
21
09 رجب
22
10 رجب
23
11 رجب
24
12 رجب
25
13 رجب
26
14 رجب
27
15 رجب
28
16 رجب
29
17 رجب
30
18 رجب
31
19 رجب

فروری رجب 1445 تا شعبان 1445

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
20 رجب
2
21 رجب
3
22 رجب
4
23 رجب
5
24 رجب
6
25 رجب
7
26 رجب
8
27 رجب
9
28 رجب
10
29 رجب
11
30 رجب
12
01 شعبان
13
02 شعبان
14
03 شعبان
15
04 شعبان
16
05 شعبان
17
06 شعبان
18
07 شعبان
19
08 شعبان
20
09 شعبان
21
10 شعبان
22
11 شعبان
23
12 شعبان
24
13 شعبان
25
14 شعبان
26
15 شعبان
27
16 شعبان
28
17 شعبان
29
18 شعبان

مارچ شعبان 1445 تا رمضان 1445

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
19 شعبان
2
20 شعبان
3
21 شعبان
4
22 شعبان
5
23 شعبان
6
24 شعبان
7
25 شعبان
8
26 شعبان
9
27 شعبان
10
28 شعبان
11
29 شعبان
12
01 رمضان
13
02 رمضان
14
03 رمضان
15
04 رمضان
16
05 رمضان
17
06 رمضان
18
07 رمضان
19
08 رمضان
20
09 رمضان
21
10 رمضان
22
11 رمضان
23
12 رمضان
24
13 رمضان
25
14 رمضان
26
15 رمضان
27
16 رمضان
28
17 رمضان
29
18 رمضان
30
19 رمضان
31
20 رمضان

اپریل رمضان 1445 تا شوال 1445

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
21 رمضان
2
22 رمضان
3
23 رمضان
4
24 رمضان
5
25 رمضان
6
26 رمضان
7
27 رمضان
8
28 رمضان
9
29 رمضان
10
30 رمضان
11
01 شوال
12
02 شوال
13
03 شوال
14
04 شوال
15
05 شوال
16
06 شوال
17
07 شوال
18
08 شوال
19
09 شوال
20
10 شوال
21
11 شوال
22
12 شوال
23
13 شوال
24
14 شوال
25
15 شوال
26
16 شوال
27
17 شوال
28
18 شوال
29
19 شوال
30
20 شوال

مئی شوال 1445 سے ذوالقعدہ 1445 تک

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
21 شوال
2
22 شوال
3
23 شوال
4
24 شوال
5
25 شوال
6
26 شوال
7
27 شوال
8
28 شوال
9
29 شوال
10
01 ذوالقعدہ
11
02 ذوالقعدہ
12
03 ذوالقعدہ
13
04 ذوالقعدہ
14
05 ذوالقعدہ
15
06 ذوالقعدہ
16
07 ذوالقعدہ
17
08 ذوالقعدہ
18
09 ذوالقعدہ
19
10 ذوالقعدہ
20
11 ذوالقعدہ
21
12 ذوالقعدہ
22
13 ذوالقعدہ
23
14 ذوالقعدہ
24
15 ذوالقعدہ
25
16 ذوالقعدہ
26
17 ذوالقعدہ
27
18 ذوالقعدہ
28
19 ذوالقعدہ
29
20 ذوالقعدہ
30
21 ذوالقعدہ
31
22 ذوالقعدہ

جون ذوالقعدہ 1445 سے ذی الحجہ 1445

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
23 ذوالقعدہ
2
24 ذوالقعدہ
3
25 ذوالقعدہ
4
26 ذوالقعدہ
5
27 ذوالقعدہ
6
28 ذوالقعدہ
7
29 ذوالقعدہ
8
30 ذوالقعدہ
9
01 ذی الحجہ
10
02 ذی الحجہ
11
03 ذی الحجہ
12
04 ذی الحجہ
13
05 ذی الحجہ
14
06 ذی الحجہ
15
07 ذی الحجہ
16
08 ذی الحجہ
17
09 ذی الحجہ
18
10 ذی الحجہ
19
11 ذی الحجہ
20
12 ذی الحجہ
21
13 ذی الحجہ
22
14 ذی الحجہ
23
15 ذی الحجہ
24
16 ذی الحجہ
25
17 ذی الحجہ
26
18 ذی الحجہ
27
19 ذی الحجہ
28
20 ذی الحجہ
29
21 ذی الحجہ
30
22 ذی الحجہ

جولائی ذوالحجہ 1445 تا محرم 1446

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
23 ذوالحجہ
2
24 ذوالحجہ
3
25 ذوالحجہ
4
26 ذوالحجہ
5
27 ذوالحجہ
6
28 ذوالحجہ
7
29 ذوالحجہ
8
30 ذوالحجہ
9
01 محرم
10
02 محرم
11
03 محرم
12
04 محرم
13
05 محرم
14
06 محرم
15
07 محرم
16
08 محرم
17
09 محرم
18
10 محرم
19
11 محرم
20
12 محرم
21
13 محرم
22
14 محرم
23
15 محرم
24
16 محرم
25
17 محرم
26
18 محرم
27
19 محرم
28
20 محرم
29
21 محرم
30
22 محرم
31
23 محرم

اگست محرم 1446 سے صفر 1446 تک

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
24 محرم
2
25 محرم
3
26 محرم
4
27 محرم
5
28 محرم
6
29 محرم
7
30 محرم
8
01 صفر
9
02 صفر
10
03 صفر
11
04 صفر
12
05 صفر
13
06 صفر
14
07 صفر
15
08 صفر
16
09 صفر
17
10صفر
18
11 صفر
19
12 صفر
20
13 صفر
21
14 صفر
22
15 صفر
23
16 صفر
24
17 صفر
25
18 صفر
26
19 صفر
27
20 صفر
28
21 صفر
29
22 صفر
30
23 صفر
31
24 صفر

ستمبر صفر 1446 سے ربیع الاول 1446 تک

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
25 صفر
2
26 صفر
3
27 صفر
4
28 صفر
5
29 صفر
6
01 ربیع الاول
7
02 ربیع الاول
8
03 ربیع الاول
9
04 ربیع الاول
10
05 ربیع الاول
11
06 ربیع الاول
12
07 ربیع الاول
13
08 ربیع الاول
14
09 ربیع الاول
15
10 ربیع الاول
16
11 ربیع الاول
17
12 ربیع الاول
18
13 ربیع الاول
19
14 ربیع الاول
20
15 ربیع الاول
21
16 ربیع الاول
22
17 ربیع الاول
23
18 ربیع الاول
24
19 ربیع الاول
25
20 ربیع الاول
26
21 ربیع الاول
27
22 ربیع الاول
28
23 ربیع الاول
29
24 ربیع الاول
30
25 ربیع الاول

اکتوبر ربیع الاول 1446 سے ربیع الاخر 1446 تک

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
26 ربیع الاول
2
27 ربیع الاول
3
28 ربیع الاول
4
29 ربیع الاول
5
30 ربیع الاول
6
01 ربیع الاخر
7
02 ربیع الاخر
8
03 ربیع الاخر
9
04 ربیع الاخر
10
05 ربیع الاخر
11
06 ربیع الاخر
12
07 ربیع الاخر
13
08 ربیع الاخر
14
09 ربیع الاخر
15
10 ربیع الاخر
16
11 ربیع الاخر
17
12 ربیع الاخر
18
13 ربیع الاخر
19
14 ربیع الاخر
20
15 ربیع الاخر
21
16 ربیع الاخر
22
17 ربیع الاخر
23
18 ربیع الاخر
24
19 ربیع الاخر
25
20 ربیع الاخر
26
21 ربیع الاخر
27
22 ربیع الاخر
28
23 ربیع الاخر
29
24 ربیع الاخر
30
25 ربیع الاخر
31
26 ربیع الاخر

نومبر ربیع الاخر 1446 سے جمادی الاول 1446 تک

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
27 ربیع الاخر
2
28 ربیع الاخر
3
29 ربیع الاخر
4
01 جمادی الاول
5
02 جمادی الاول
6
03 جمادی الاول
7
04 جمادی الاول
8
05 جمادی الاول
9
06 جمادی الاول
10
07 جمادی الاول
11
08 جمادی الاول
12
09 جمادی الاول
13
10 جمادی الاول
14
11 جمادی الاول
15
12 جمادی الاول
16
13 جمادی الاول
17
14 جمادی الاول
18
15 جمادی الاول
19
16 جمادی الاول
20
17 جمادی الاول
21
18 جمادی الاول
22
19 جمادی الاول
23
20 جمادی الاول
24
21 جمادی الاول
25
22 جمادی الاول
26
23 جمادی الاول
27
24 جمادی الاول
28
25 جمادی الاول
29
26 جمادی الاول
30
27 جمادی الاول

دسمبر جمادی الاول 1446 سے جمادۃ الآخرۃ 1446 تک

اتوارپیرمنگلبدھجمعراتجمعہہفتہ
1
28 جمادی الاول
2
29 جمادی الاول
3
30 جمادی الاول
4
01 جمادۃ الآخرۃ
5
02 جمادۃ الآخرۃ
6
03 جمادۃ الآخرۃ
7
04 جمادۃ الآخرۃ
8
05 جمادۃ الآخرۃ
9
06 جمادۃ الآخرۃ
10
07 جمادۃ الآخرۃ
11
08 جمادۃ الآخرۃ
12
09 جمادۃ الآخرۃ
13
10 جمادۃ الآخرۃ
14
11 جمادۃ الآخرۃ
15
12 جمادۃ الآخرۃ
16
13 جمادۃ الآخرۃ
17
14 جمادۃ الآخرۃ
18
15 جمادۃ الآخرۃ
19
16 جمادۃ الآخرۃ
20
17 جمادۃ الآخرۃ
21
18 جمادۃ الآخرۃ
22
19 جمادۃ الآخرۃ
23
20 جمادۃ الآخرۃ
24
21 جمادۃ الآخرۃ
25
22 جمادۃ الآخرۃ
26
23 جمادۃ الآخرۃ
27
24 جمادۃ الآخرۃ
28
25 جمادۃ الآخرۃ
29
26 جمادۃ الآخرۃ
30
27 جمادۃ الآخرۃ
31
28 جمادۃ الآخرۃ

ہجری کیلنڈر، جسے قمری یا اسلامی کیلنڈر بھی کہا جاتا ہے، کا افتتاح 622 عیسوی میں ہوا، جس میں نبی محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی مکہ سے مدینہ کی طرف ہجرت ہوئی تھی۔ یہ ایک قمری چکر پر چلتا ہے، جس میں 29 یا 30 دنوں کے 12 مہینے ہوتے ہیں، اور اس لیے سال گریگورین کیلنڈر سے دس سے بارہ دن چھوٹا ہوتا ہے۔ یہ چکراتی مشاہدہ فطرت کی روانی اور تال کو مجسم کرتا ہے، مادّے پر روحانی پر زور دیتا ہے، اور چاند کے بدلتے ہوئے مراحل کو اتحاد، تجدید اور عکاسی پر اسلامی توجہ کی علامت کے طور پر ذہن میں لاتا ہے۔

ہجری کیلنڈر کیوں اہمیت رکھتا ہے؟


عالمی مسلم کمیونٹی کے لیے ہجری کیلنڈر مذہبی زندگی کا ایک لازمی پہلو ہے۔ یہ اہم اسلامی واقعات کے وقت کا تعین کرتا ہے، بشمول رمضان کا مقدس مہینہ، عید الفطر، اور مکہ کی زیارت، حج۔ ہر تاریخ کی اندرونی روحانی قدر ہوتی ہے اور یہ اسلامی بیانیہ کے اندر ایک تاریخی شناخت کو مجسم کرتی ہے، جس سے کسی کے ایمان اور اس کی میراث کی جان بوجھ کر مشاہدہ اور تعریف کی جاسکتی ہے۔

ہجری کیلنڈر کے مشاہدات


کسی بھی اسلامی یادگار کی تیاری کا آغاز چاند نظر آنے سے ہوتا ہے، یہ ایک حیرت انگیز طور پر یکجا کرنے والا واقعہ ہے جو عالمی سطح پر آنے والے مہینے کے لیے توقعات اور تیاری کو روشن کرتا ہے۔ رمضان کے آغاز کا اعلان کرنے والے پہلے چاند سے لے کر عید کی خوشیاں منانے والے آسمانوں کے صاف ہونے تک، ہجری کیلنڈر محض ایک جامد پیمانہ نہیں ہے۔ یہ ایک لازوال روایت کے ساتھ ہم آہنگی میں رہنے کے لیے ایک رہنما ہے۔


رمضان اور عید کی خوشیاں


ہجری سال کا نواں مہینہ، رمضان، گہری روحانی عکاسی، بلند عقیدت، اور کمیونٹی یکجہتی کا وقت ہے۔ مسلمان صبح سے شام تک روزہ رکھتے ہیں، اپنی توانائیاں نماز، صدقہ اور خود کی بہتری پر مرکوز کرتے ہیں۔ روزے کے مہینے کا اختتام خوشیوں بھری عید الفطر ہے، جس میں اجتماعی دعاؤں، کھانے بانٹنے، اور ضرورت مندوں کو تحائف دینے کے ذریعے تشکر اور جشن منایا جاتا ہے۔


محرم اور عاشورہ


محرم، اسلامی سال کا پہلا مہینہ، اور محرم کا 10واں دن جسے عاشورہ کہا جاتا ہے، شیعہ اور سنی مسلمانوں کے لیے گہری اہمیت رکھتا ہے۔ محرم یاد کا مہینہ ہے اور جدید شیعہ رسم میں سوگ اور محمد کے نواسے حسین ابن علی کی شہادت کی یاد شامل ہے۔ بہت سے سنیوں کے لیے، عاشورہ کو ایک روزہ کے طور پر منایا جاتا ہے جو حضرت موسیٰ اور بنی اسرائیل کو مصر کے فرعون سے نجات دلانے کی یاد میں منایا جاتا ہے۔


ہجری کیلنڈر کے سماجی اور ثقافتی اثرات


ہجری کیلنڈر ایک مذہبی نمونے سے زیادہ ہے۔ اس کے سنگ میل مسلم معاشروں کے ثقافتی اور سماجی تانے بانے کو تشکیل دیتے ہیں۔ اہم تاریخوں کی توقع کمیونٹی کی ہم آہنگی کو فروغ دیتی ہے، جبکہ وقت کی پابندی پر رکھی گئی قدر غور و فکر اور شکرگزاری کی حوصلہ افزائی کرتی ہے۔ مزید برآں، ہجری کیلنڈر عالمی مسلم کمیونٹی کے اندر تنوع کی یاد دہانی کے طور پر کام کرتا ہے، کیونکہ مختلف خطوں اور فرقوں میں عبادات اور روایات میں فرق ظاہر ہوتا ہے۔


مشترکہ وقت کے ذریعے عالمی رابطہ


ہجری کیلنڈر کی آفاقیت سرحدوں، زبانوں اور ثقافتوں سے بالاتر ہے، جو دنیا بھر کے مسلمانوں کے لیے ایک رابطہ فراہم کرتی ہے۔ کوئی جہاں بھی ہو، مؤذن کی پکار ایک ہی دعوت لے کر آتی ہے، اسلامی کیلنڈر کی تاریخیں ایک ہی خدائی فرمان کی بازگشت کرتی ہیں، اور برادری تعظیم کے چکر میں متحد ہے۔

عصر حاضر میں، ہجری کیلنڈر مسلم کمیونٹی کو چیلنج کرتا ہے کہ وہ روایت کو ایک تیز رفتار، باہم مربوط دنیا کے تقاضوں سے ہم آہنگ کرے۔ قمری کیلنڈر کے حامیوں کا کہنا ہے کہ اس کی پابندی آج کے معاشرے میں نظم و ضبط، صبر اور ذہن سازی کا احساس پیدا کرتی ہے، جو کہ اہم خوبیاں ہیں۔ تاہم، عالمی برادری کو یہ یقینی بنانے کا کام بھی درپیش ہے کہ کیلنڈر کے مشاہدات ثقافتی طریقوں اور سماجی سیاق و سباق کے تنوع سے مطابقت کے ساتھ تیار ہوں۔
ڈیجیٹل دور اور ہجری کیلنڈر
ڈیجیٹل دور جدید مسلمانوں کو ہجری کیلنڈر کو اپنی روزمرہ کی زندگی میں شامل کرنے میں مدد کرنے کے لیے نئے اوزار اور وسائل لائے ہیں۔ موبائل ایپس، ویب سائٹس، اور ڈیجیٹل لائبریریاں موجودہ ہجری تاریخ کے ساتھ ساتھ مختلف قمری مہینوں اور دنوں کی تشریح اور اہمیت کے بارے میں درست معلومات فراہم کرتی ہیں۔ سوشل میڈیا پلیٹ فارم اسلامی کیلنڈر کو نیویگیٹ کرنے کے لیے علم، تجربات، اور بہترین طریقوں کو بانٹنے کے راستے کے طور پر کام کرتے ہیں۔

نتیجہ:


ہجری کیلنڈر زمینی اور آسمانی کے درمیان ایک جنکشن پوائنٹ کے طور پر کھڑا ہے، ایک چکراتی داستان جو ہر گزرتے مہینے کے ساتھ سامنے آتی ہے۔ اس کے مشاہدات ماضی کے آثار نہیں ہیں، بلکہ زندگی، ایمان، تاریخ اور برادری کے سانس لینے والے تاثرات ہیں۔ اسلامی کیلنڈر پر تشریف لے جانا زندگی کے مسلسل چکر کی ایک لازوال یاد دہانی ہے، اور صالح زندگی اور ہم آہنگی کے ساتھ رہنے کا ایک مینار ہے۔
ایک ایسے دور میں جہاں زندگی کی رفتار اکثر ہمارے ہر عمل پر حکمرانی کرتی نظر آتی ہے، یہ ہجری کیلنڈر کی پائیدار مطابقت ہے جو وقت پر ایک مختلف نقطہ نظر پیش کرتا ہے جسے خرچ کرنے کی چیز کے طور پر نہیں، بلکہ اہمیت کے لمحات کو نشان زد کرنے کا موقع فراہم کرتا ہے۔ ، توقف اور غور کرنے کے لیے، روح اور ارادے کی تجدید کے لیے۔ مسلمانوں کے لیے، یہ قمری سال کا تحفہ ہے، جو مقدس ایام کی ایک ٹیپسٹری کو کھولتا ہے جو ہمارے ماضی، حال اور مستقبل کو ایمان کے ایک مسلسل دھاگے میں باندھ دیتا ہے۔


 

Leave a Comment